“یہاں میں اپنے لیے بیٹھا ہوں”

“یہاں میں اپنے لیے بیٹھا ہوں”
سٹریس فری رہیں اور خوش رہیں
کچھ دن پہلے ایک دکاندار اپنی دکان بند کرنے کے بعد سامنے چارپائی پر بیٹھا تھا، گزرنے والے ایک شخص نے کہا” یار یہاں بھی تو بیٹھے ہو، اس سے اچھا ہے دکان کھول کر بیٹھ جاتے شاید کوئی گاہک بھی آ جائے” ۔ یہ سن کر دکاندار نے مسکراتے ہوئے کہا” یہاں میں اپنے لیے بیٹھا ہوں۔

یہ کچھ لمحے میرے دن بھر کی تھکان دور کرتے ہیں اور میں تازہ دم ہو کر اپنے گھر واپس چلا جاتا ہوں” یہ جواب انتہائی خوب صورت تھا، میں نے گھر آتے ہی اس جملے کو اپنی ڈائری میں درج کر دیا۔ ایک ان پڑھ دکاندار نفسیات کا وہ علم جانتا ہے جسے اکثر تعلیم یافتہ لوگ نظر انداز کر دیتے ہیں کہ اپنے لیے وقت نکالیں تو آپ خود سے مطمئن رہتے ہیں۔ خوشیاں اور مسکراہٹیں آپ کے چہرے پر بکھری رہتی ہیں۔ پھر جو شخص اپنے آپ سے خوش ہو وہی دوسروں کو خوشی کے پل دے سکتا ہے۔ جو خود سے محبت کرے وہی دوسروں سے محبت کرنے کا ہنر جانتا ہے۔۔۔

آپ مزدور ہیں، کوئی جاب کرتے ہیں یا پھر تاجر ہیں۔ آپ کا تعلق کسی بھی شعبے سے ہو، یاد رکھیں کہ اپنے کام سے ہٹ کر اپنے لیے کچھ وقت نکال لیا کریں۔ دس منٹ، پندرہ منٹ یا پھر ایک گھنٹہ۔ اس دوران اپنی مرضی اور دلچسپی کا کام کریں۔ جو آپ کو پسند ہے وہ کریں۔ اس دکاندار کے مطابق سڑک کنارے بیٹھ کر آتے جاتے لوگوں کو دیکھنا مجھے اچھا لگتا ہے۔

کچھ لوگوں کو مطالعہ پسند ہے، کوئی پارک میں کچھ دیر ٹھنڈی گھاس پر بیٹھا خود کو مطمئن کرنے کی کوشش میں کامیاب ہو جاتا ہے۔ کسی کو موسیقی پسند ہے۔ کوئی چائے سے لطف اندوز ہوتے ہوئے اپنا سٹریس ختم کر لیتا ہے۔ ہر انسان کی دلچسپی کے مطابق کچھ کام ہوتے ہیں۔ بس اپنی جاب، ڈیوٹی یا کام سے فری ہو کر کچھ وقت ان کاموں میں خود کو مصروف رکھیں۔ سٹریس فری رہیں اور خوش رہیں۔ ایسے لوگ اپنے ساتھ ساتھ اپنی فیملی کو بھی خوش رکھنے کا ہنر جانتے ہیں کیوں کہ یہ لوگ نہ خود کیلئے اذیت ہیں نہ دوسروں کیلئے تکلیف کا باعث ہوتے ہیں۔

سلامت رہیں
“وسیم قریشی”

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *